اور کیا اس سے زیادہ کوئی نرمی برتوں دل کے زخموں کو چھوا ہے تیرے گالوں کی طرح

Leave a comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *